زیارت روضہ رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی روایات اور ان کی تحقیق

مضمون: زیارت روضہ رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی روایات اور ان کی تحقیق (صفحات: 16)
تحریر: حافظ زبیر علی زئی رحمہ اللہ
شائع ہوا: ماہنامہ اشاعۃ الحدٰث 77 صفحہ نمبر 16
مکمل مضمون آن لائن پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں۔

77-17
جو شخص مدینہ نبویہ جانے کی سعادت حاصل کرے تو اسے چاہئے کہ مسجد نبوی (علٰی صاحبھا الصلٰوۃ والسلام) جا کر دو رکعتیں پڑھے اور روضہ رسول کی زیارت کرے، نماز والا درود پڑھے اور اگر حجرہ مبارکہ کا دروازہ اس کے لئے کھل جائے اور خوش قسمتی سے وہ قبر مبارک کے پاس پہنچ جائے تو السلام علیک یا رسول اللہ اور الصلٰوۃ علیک یا رسول اللہ بھی پڑھے جیسا کہ سیدنا عبد اللہ بن عمر رضی اللہ عنہ سے موقوفا ثابت ہے۔ (دیکھئے فضائل درود وسلام ص 141، فضل الصلٰوۃ علی النبی صلی اللہ علیہ وسلم بتحقیقی: 100)
لیکن یاد رہے کہ حجرہ مبارکہ کے باہر تخاطب والے یہ الفاظ صحابہ کرام، تابعین اور تبع تابعین وغیرہم سے ثابت نہیں، لہٰذا باہر صرف نماز والا درود پڑھنا چاہئے۔ حوالہ الحدیث 77 صفحہ نمبر31

ماہنامہ اشاعۃ الحدیث کی مکمل لسٹ یعنی تمام شمارے یہاں پر دیکھیں۔